Question was

(۱) وسیلہ کیا ہے؟ (۲) وسیلہ نبی صلی اللہ علیہ وسلم سے یا صحابہ رضی اللہ عنہم سے ثابت ہے؟ (۳) دعا وسیلہ سے کیسے مانگنا درست ہے؟

[1] What is Wasila? [2] Is it proven from Holy Prophet (asws) & Sahaba? [3] How to make prayer with Wasila?

Here is the Reply

(۱) وہ نیک عمل یا عند اللہ مقبول شخصیت کہ جس کے حوالہ اور طفیل سے اپنی دعاء کو دعاء مانگنے والا ارجی للقبول بنائے وہ وسیلہ ہے۔
(۲) ثابت ہے، بخاری شریف، ترمذی شریف اور دیگر کتب حدیث نیز شروحِ حدیث اور فقہ وفتاوی میں اسی طرح مصرح ہے، فتاوی محمودیہ،احسن الفتاوی وغیرہ میں بسط سے کلام ہے، دلائل بھی مذکور ہیں۔
(۳) دعامانگنے والا یہ کہے کہ یا اللہ میں اپنے فلاں عمل یا فلاں بزرگ کے وسیلہ اور طفیل سے درخواست کرتا ہوں کہ میری دعاء قبول فرمالیجیے، الفاظِ وسیلہ میں کچھ اور بھی الفاظ زبان سے اداء کرے تو مضائقہ نہیں۔

[1] That good deed, or Person who is Liked/Accepted in view of Allah, via which the person who is making prayer, makes his prayers accepted; is Wasila

[2] It is proven. Bukhari, tirmidhi, and other books of Hadeeth, and their explanation books, and books of Fiqh and Fatawa have mentioned it. It is explained in detail alongwith reasons in Fatawa Mahmoodia, Ahsan ul Fatawa etc

[3]The one who is making prayer, says: O Allah! I make wasila of my so and so act or that great personality, accept my prayer. Even if some other words are used, it wont harm

wasd

Advertisements